یمنی بحران : جس سے دنیا نے نظریں پھیر لیں

یمن میں عالمی سطح پر تسلیم کی جانے والی صدر منصور حادی کی حکومت کی حمایتی فورسز اور حوثی باغیوں کی فورسز کے درمیان جھڑپیں جاری ہیں۔ اس مسلح تصادم کے نتیجے میں دسیوں ہزاروں افراد ہلاک، زخمی یا بہ گھر ہوئے ہیں۔عورتیں اور لڑکیاں ان 21 لاکھ 80 ہزار افراد کی نصف ہیں جو نقل مکانی کرنے پر مجبور ہوئے۔ عالیہ نامی خاتون کا کہنا ہے کہ خوراک، پانی اور طبی سہولیات کا فقدان ہے۔ وہ اپنے داماد کی کمائی جو چار ڈالر یومیہ کماتے ہیں پر تین نسلوں پر مبنی خاندان کی دیکھ بھال کر ہی ہیں۔ وہ اس کیمپ میں صوبہ حدیدہ سے نقل مکانی کر کے آئی ہیں۔

 

 

 

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s